About انا مدینۃ العلم و علی بابھا

أنا مدینة العلم، و علي بابھا

”میں علم کا شہر ہوں اور علی (رضی اللہ عنه) اس کا دروازہ ہیں۔“

عوام الناس میں مشہور ہے کہ یہ رسوِ اکرم ﷺ کا فرمانِ گرامی ہے، مگر حقیقت میں ایسا نہیں، کیونکہ اصولِ محدثین کے مطابق یہ روایت پایۂ صحت کو نہیں پہنچتی۔ اس سلسلے میں مروی تمام روایات کی استنادی حیثیت جاننے کیلئے ہماری ویب سائیٹ ملاحظہ کریں۔

سیدنا علی رضی اللہ عنه دامادِ رسول، خلیفٔہ چہارم اور شیر خدا ہیں۔ زبانِ نبوت سے انہیں بہت سے فضائل و مناقب نصیب ہوئے۔ سیدنا علی رضی اللہ عنه کے بارے میں جو بات رسولِ اکرم ﷺ سے باسند صحیح ہم تک پہنچ گئی ہے، ان کی حقیقی فضیلت اور منقبت وہی ہے۔ من گھڑت، منکر اور ضعیف روایات پر مبنی پلندے کسی طرح بھی فضائل و مناقب کا درجہ نہیں پا سکتے۔

انا مدینة العلم و علي بابھا – میں علم کا شہر ہوں اور علی اس کا دروازہ

میں علم کا شہر ہوں؛ یہ حدیث عوام الناس میں حضرت علی رضی اللہ عنه کے فضائل کے حوالے سے کافی مشہور و معروف ہے۔ حدیث کے الفاظ کچھ اس طرح ہیں کہ رسول اکرم ﷺ نے فرمایا: انا مدینۃ العلم و علی بابھا ”میں علم کا شہر ہوں اور علی (رضی اللہ عنه) ...